ریکوڈک منصوبے کے کامیاب معاہدے پر حکومت اور ملک بھر کی بزنس کمیونٹی مبار کباد کی مستحق ہے : پیاف

لاہور (ویب  نیوز) پاکستان انڈسٹریل اینڈ ٹریڈرز ایسوسی ایشنز فرنٹ (پیاف) نے ریکوڈک منصوبے کے کامیاب معاہدے پر حکومت اور ملک بھر کی بزنس کمیونٹی کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا ہے کہ یہ حکومت کی بہت بڑی کامیابی ہے ملک میں مزید سرمایہ کاری اور روزگار میسر ہو گا ، ریکوڈک معاہدے پر پاکستان کے ذمے11 ارب ڈالرکا جرمانہ ختم ہونابھی خوش آئند ہے۔ اس فیصلے میں10 سال کی تاخیر کی وجہ سے سرمایہ کاروں اورپاکستان کو ناقابل تلافی نقسان پہنچا ہے۔ سیئنر وائس چیئرمین پیاف ناصر حمیدخان نے وائس چیئرمین پیاف جاوید اقبال صدیقی کے ہمراہ آج پیاف آفس گلبرگ میں صنعتکاروں کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ حکومت نے ریکوڈک میں بہترین معاہدہ کر کے وسائل کا تحفظ کیا ہے اور وزیراعظم، آرمی چیف اور وزیر خزانہ کے مشکور ہیں کہ انہوں نے ملکی مفاد میں بہترین معاہدہ کرکے ملک خصوصا بلوچستان میں سرمایہ کاری کی راہیں کھول دی ہیں اور اس معاہدے سے حکومت اور سرمایہ کاروں کے درمیان اعتماد سازی کی فضا بحال ہو گی ۔ریکوڈک دنیا میں سونے اور تانبے کی سب سے بڑی کان ہے، معاہدے کے تحت10 ارب ڈالر صوبہ بلوچستان میں لگائے جائیں گے جس سے8 ہزار نئی ملازمتیں پیدا ہونگی اور ترقی و خوشحالی کے نئے دور کا آغاز ہو گا۔ مزید یہ کہ پاکستان11 ارب ڈالر کے جرمانے سے نہ صرف بچ گیا ہے بلکہ نیا معاہدہ بھی طے پا گیا ہے۔ بہر حال اس منصوبے پر تقریبا 26 سال کے بعد کام شروع ہونے جا رہا ہے جس کا کریڈٹ پی ٹی آئی حکومت کو جاتا ہے اور امید کرتے ہیں کہ یہ منصوبہ خوش اسلوبی سے بخیر و خوبی مکمل ہو گا اور اسکا فائدہ بلوچستان اور پاکستان بھر کی بزنس کمیونٹی کو پہنچے گا

By Editor