پشاور ویمن چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے وفد کا آئی سی سی آئی کا دورہ
حکومت خواتین انٹرپرینیورز کی حوصلہ افزائی کیلئے سازگار پالیسیاں تشکیل دے۔ محمد شکیل منیر
معیشت میں خواتین کا کردار بڑھا کر پاکستان پائیدار ترقی حاصل کر سکتا ہے۔ محترمہ شاہدہ پروین

اسلام آباد (ویب نیوز  )

پشاور ویمن چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کی صدر محترمہ شاہدہ پروین کی قیادت میں ایک وفد نے اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کا دورہ کیا اور خواتین انٹرپرینورز کی بہتر ترقی کے امور پر چیمبر کے عہدیدارن کے ساتھ تبادلہ خیال کیا۔اس موقع پر اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر محمد شکیل منیر اور پشاور ویمن چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کی صدر محترمہ شاہدہ پروین نے مشترکہ کوششوں کے ذریعے خواتین انٹرپرینیورز کے مسائل حل کرنے اور ان کو معاشی طور پر بااختیار بنانے کے لیے مل کر کام کرنے کے لیے مفاہمت کی ایک یادداشت پر دستخط بھی کیے۔
باہمی تعاون کے معاہدے کے تحت اسلام آباد چیمبر آف کامرس خواتین انٹرپرینیورز کے اہم مسائل کو متعلقہ فورمز پر اجاگر کرنے میں پشاور ویمن چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے ساتھ تعاون کرے گا اور ملک کی اقتصادی ترقی میں خواتین کے کردار کو بڑھانے کی کوششوں میں اس کا ہرممکن ساتھ دے گا۔ دونوں چیمبرز باہمی تعاون کے ذریعے خواتین انٹرپرینیورز کو کاروبار کی ترقی میں سہولت فراہم کریں گے اور کاروباری خواتین کے مشترکہ مسائل کے ازالے کے لیے مل کر کوششیں کریں گے۔ دونوں چیمبرز باہمی تعاون کے ذریعے کاروباری خواتین کو بین الاقوامی تجارتی میلوں اور نمائشوں میں شرکت کرنے کی حوصلہ افزائی کریں گے تا کہ وہ اپنے لئے کاروبار کے نئے مواقع تلاش کر سکیں۔ دونوں ادارے کاروباری سرگرمیوں اور برآمدات کے بہتر فروغ کیلئے سفارشات تیار کر کے حکومت کو ارسال کریں گے۔ دونوں ادارے پاکستان کے مثبت امیج کو فروغ دینے اور تجارت، سرمایہ کاری، برآمدات اور سیاحت کی ترقی کے لیے بھی مل کر کوششیں کریں گے۔
اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر محمد شکیل منیر نے کہا کہ پاکستان میں صرف ایک فیصد خواتین کاروبار کر رہی ہیں جس وجہ سے پاکستان اپنی اصل اقتصادی صلاحیت کے مطابق ترقی کرنے میں ابھی تک ناکام رہا ہے لہذا انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ زیادہ سے زیادہ خواتین کو کاروبار کی طرف راغب کرنے کیلئے سازگار پالیسیاں تشکیل دے جس سے ملک بہتر ترقی کرے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ حکومت پالیسی سازی کے ذریعے خواتین کیلئے کاروبار کی راہ میں حائل تمام رکاوٹوں کو دور کرے اور ملک کی پائیدار اقتصادی ترقی یقینی بنانے کیلئے مزید خواتین کی انٹرپرینیورشپ کی طرف حوصلہ افزائی کرے۔ انہوں نے یقین دلایا کہ آئی سی سی آئی کاروباری خواتین کے مفادات کے بہتر فروغ کی کوششوں میں پشاور ویمن چیمبر آف کامرس کے ساتھ مکمل تعاون کرے گا۔
پشاور وویمن چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کی صدر محترمہ شاہدہ پروین نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ معیشت میں خواتین انٹرپرینیورز کا کردار بڑھائے بغیر پاکستان کیلئے پائیدار معاشی ترقی کا حصول ممکن نہیں ہے لہذا حکومت اس سلسلے میں تمام ممکنہ اقدامات اٹھائے۔ انہوں نے کہا کہ بینکوں سے آسان قرضوں کے حصول کا فقدان اور قانون رکاوٹیں خواتین کیلئے کاروبار کرنے کی راہ میں اہم مسائل ہیں لہذا حکومت ان مسائل کو جلد حل کرنے پر توجہ دے۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ آئی سی سی آئی اور پشاور ویمن چیمبر آف کامرس کا باہمی تعاون خواتین انٹرپرینیورز کے مفادات کے بہتر فروغ اور ان کو معاشی طور پر بااختیار بنانے میں معاون ثابت ہو گا۔
اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے سینئر نائب صدر جمشید اختر شیخ، نائب صدر محمد فہیم خان، سابق سینئر نائب صدور محمد نوید ملک اور خالد چوہدری سمیت ناصرہ علی، پروین خان درانی، زہرہ ولیانی اور دیگر نے بھی اپنے خیالات کا اظہار کیا اور خواتین انٹرپرینیورز کی حوصلہ افزائی کیلئے حکومت سے سازگار پالیسیاں بنانے کا مطالبہ کیا۔

By Editor