نئے قانون کرایہ داری پر عمل درآمدکریا جائے۔چیف جسٹس سے اپیل۔ محمد شکیل منیر
کرایہ داری کے تنازعات جلد حل ہوں گے اور تجارتی سرگرمیوں کو بہتر فروغ ملے گا۔

اسلام آباد (ویب نیوز  )

اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر محمد شکیل منیر نے چیف جسٹس اسلام آباد ہائی کورٹ اطہرمن اللہ سے اپیل کی ہے کہ ماتحت عدالتوں کو نئے قانون کرایہ داری پر عمل درآمد کرنے کی ہدایات جاری کی جائیں جس سے کرایہ داری کے تنازعات جلد حل ہوں گے اور تجارتی سرگرمیوں کو بہتر فروغ ملے گا۔ انہوں نے کہا کہ آئی سی سی آئی اور دیگر سٹیک ہولڈرز کی انتھک کوششوں سے قانون کرایہ داری کا ترمیمی بل قومی اسمبلی اور سینٹ سے پاس ہوا تھا جبکہ صدر مملکت نے بھی اس پر دستخط کر دیئے تھے اور نئے قانون کا گزٹ نوٹیفیکیشن بھی ہو گیا ہے لیکن عدالتیں ابھی تک اس نئے قانون کے مطابق فیصلے نہیں کر رہی ہیں جس وجہ سے تاجر برادری کو گوناگوں مسائل کا سامنا ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے اسلام آباد چیمبر کے سابق صدر و اسلام آباد فاؤنڈر لائنز کلب کے صدر باصر داؤد کی جانب سے اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے عہدیداران کے اعزاز میں دئے گئے برنچ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ چیمبر کے سینئر نائب صدر جمشید اختر شیخ، نائب صدر محمد فہیم خان، سینئر سیاسی رہنما سنیٹر ظفر علی شاہ، سابق ممبر قومی اسمبلی زمرد خان، معروف اکانومسٹ ڈاکٹر اشفاق حسن، چیمبر کے سابق صدور میاں اکرم فرید، عبد الرؤف عالم، خالد جاوید، زبیر احمد ملک، طارق صادق، میاں شوکت مسعود، محمد اعجاز عباسی، خالد اقبال ملک، ظفر بختاوری،، شیخ عامر وحید اور زاہد مقبول سمیت چوہدری عبد الرؤف، محمد نوید ملک، ناصر قریشی، ڈاکٹر مسعود غنی، ڈاکٹر افشاں ملک، سفینہ شاہ، چوہدری مسعود، خالد چوہدری، اشفاق چٹھہ، سعید بھٹی، ملک نجیب، راجہ سفیر، چوہدری طاہر، شازیہ رضوان، نگینہ خلیق، ناصرہ علی نینا، انجینئر فہیم اقبال، انجینئر ذیشان صادق، فیضان شہزاد، طاہر عباسی، میاں مقبول، اشعر حفیظ، طاہر ایوب، چوہدری عبد الغفار، سیف الرحمن، گل شیر سجاد، ملک جاوید،عمران منہاس، راجہ وحید، نوید ستی، ارشد حمید، چوہدری محمد علی اور دیگر بھی اس موقع پر موجود تھے۔
محمد شکیل منیر نے کہا کہ جب تک نئے قانون کرایہ داری پر عدالتوں میں عمل درآمد نہیں کیا جائے گا عوام اس کے ثمرات سے محروم رہیں گے، تاجروں کے کرایہ داری کے تنازعات بہتر طریقے سے حل نہیں ہوں گے اور تجارتی سرگرمیاں بھی متاثر ہوں گی۔ لہذا انہوں نے اپیل کی کہ چیف جسٹس اسلام آباد ہائی کورٹ نئے قانون پر عمل درآمد کیلئے ماتحت عدالتوں ضروری ہدایات جاری کریں تا کہ اس قانون کے مطابق کرایہ داروں کے مسائل حل ہوں اور کاروبار کیلئے مزید سازگار حالات پیدا ہوں۔

By Editor