متحدہ عرب امارات کے بو عبداللہ گروپ کے چیئرمین کا آئی سی سی آئی کا دورہ
پاکستان میں کاروبار و سرمایہ کاری کرنے میں دلچسپی کا اظہار
پاکستان غیر ملکی سرمایہ کاروں کیلئے پرکشش مارکیٹ ہے۔ شکیل منیر

اسلام آباد ( ویب نیوز )

متحدہ عرب امارات کے بو عبداللہ گروپ آف کمپنیز کے چیئرمین ڈاکٹر بو عبداللہ نے اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کا دورہ کیا اور چیمبر کے صدر محمد شکیل منیر سے ملاقات کے دوران کاروبار اور سرمایہ کاری کیلئے پاکستان کی معیشت میں دلچسپی ظاہر کی۔ چیمبر کے سینئر نائب صدر جمشید اختر شیخ، سابق سینئر نائب صدر محمد نوید ملک اور دیگر بھی اس موقع پر موجود تھے۔


ڈاکٹر بو عبداللہ نے بتایا کہ ان کا گروپ ایشیا اور دنیا کے دیگر حصوں میں 270 سے زائد کمپنیوں کا مالک ہے جو رئیل اسٹیٹ، لیگل اور بزنس کنسلٹنسی کے شعبوں میں کاروباری کر رہی ہیں اور اب ان کا گروپ پاکستان کی مارکیٹ میں کاروبار اور سرمایہ کاری میں دلچسپی رکھتا ہے۔ بو عبداللہ رئیل اسٹیٹ رہائشی، کمرشل اور ریٹیل شعبوں میں ہزاروں پراجیکٹس ڈلیور کر چکا ہے جو جدید دور کے تقاضوں کے مطابق بدلتی ہوئی ضروریات کو پورا کر رہی ہیں۔
اس موقع پر اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر محمد شکیل منیر نے بو عبداللہ گروپ آف کمپنیز کے چیئرمین ڈاکٹر بو عبداللہ کا آئی سی سی آئی کا دورہ کرنے پر شکریہ ادا کیا اور انہیں پاکستان کے رئیل اسٹیٹ اور تعمیراتی شعبے میں سرمایہ کاری کے مواقعوں کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم کے تعمیراتی پیکج کی وجہ سے رئیل اسٹیٹ اور تعمیراتی شعبہ اس وقت پاکستان میں تیزی سے ترقی کر رہا ہے اور غیر ملکی سرمایہ کاروں کے لیے یہی مناسب وقت ہے کہ وہ پاکستان میں اس شعبے میں کاروبار اور سرمایہ کاری کے مواقع تلاش کریں۔


آئی سی سی آئی کے صدر نے کہا کہ متحدہ عرب امارات پاکستان کا سب سے بڑا تجارتی پارٹنر ہے اور دونوں ممالک کی باہمی تجارت 8 ارب ڈالر سے زیادہ ہے جو حوصلہ افزا ہے۔ انہوں نے معزز مہمان کو سی پیک کے تحت ترقی پانے والے منصوبوں کے بارے میں بھی آگاہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ گوادر پورٹ کے آپریشنل ہونے سے متحدہ عرب امارات کی تاجر برادری کے لیے بہت سے نئے مواقع پیدا ہوں گے کیونکہ اس پورٹ کے تحت پاکستان مشرق وسطیٰ کو افغانستان اور وسطی ایشیا تک آسان رسائی فراہم کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستانی سمندری بندرگاہ اسے بحیرہ عرب تک بہتر رسائی فراہم کرتی ہے جس میں متحدہ عرب امارات اور جی سی سی ممالک کے لیے سرمایہ کاری کیلئے وسیع امکانات موجود ہیں۔ انہوں نے یقین دلایا کہ آئی سی سی آئی پاکستان میں صحیح شراکت داروں کی تلاش میں بو عبداللہ گروپ کے ساتھ مکمل تعاون کرے گا۔

By Editor