کراچی (ویب ڈیسک)

ڈ اکٹر شمشاد اختر، چیئر پرسن پاکستان اسٹاک ایکسچینج نے پاکستان  مرکنٹائل ایکسچینج (PMEX)کا دورہ کیا۔PMEXکے مینیجنگ ڈائریکٹر اعجاز علی شاہ نے مہمان کو خوش آمدید کہا  اور وقت نکانے اور ایکسچینج کے امور اور مشن میں گہری دلچسپی ظاہر کرنے پر ان کا شکریہ ادا کیا۔انہوںنے ڈاکٹر شمشاد اختر کوپاکستان میں ایک متحرک اور مضبوط فیوچر مارکیٹ بنانے میں PMEXکے کردار کے بارے میں آگاہ کیا۔ایکسچینج کی پیشرفت کے بارے میں بات کرتے ہوئے،اعجاز شاہ نے بتایا کہ PMEXتکنیکی ترقی، متنوع پراڈکٹ سوٹ، توسیع شدہ  روایات اور بہتر کسٹمر سروسز کی وجہ سے مضبوط سے مضبوط ہوتا چلا گیا ہے۔ان اقدامات نے مارکیٹ کے شرکا میں اعتماد پیدا کیا ہیاور انہیں مستقبل میں فعال طور پر تجارت کرنے کی ترغیب دی ہے۔نتیجتا، اوسط یومیہ تجارتی حجم 2015 میں 3.70بلین روپے سے بڑھ کر 2021 میں 11.78بلین روپے ہوگیا ، جس کے نتیجے میں گزشتہ سات سالوں کے دوران تجارتی حجم میں تین گنا اضافہ ہوا۔انہوں نیڈائریکٹ فنڈ ماڈل DFMکے بارے میں بھی بتایا،DFMکے تحت ،ایکسچینج صارفین سے براہ راست فنڈ اکٹھا کرتا ہیاور ساتھ ہی بروکرز کی شمولیت کے بغیر ان کے بینک اکانٹس میں رقوم منتقل کرتا ہے۔DFMصارفین کو ہر وقت اپنے فنڈز کا مکمل کنٹرول حاصل کرنے کا اختیار دیتا ہے اور بنیادی طور پر موجود صارفین کی خدمت اور نئے کاروباروں کی درخواست کرنے کے لیے بروکرز کے کردار کو محدود کرتا ہے۔PMEXکو درپیش مشکلات پر روشنی ڈالتے ہوئے انہوںنے  پاکستان میں بلیک مارکیٹ آپریٹرز کی کاروائیوں پر روشنی ڈالی۔ یہ بلیک مارکیٹ آپریٹرز نہ صرف PMEXکے کاروبار کو کھاجاتے ہیں بلکہ ملک کے ذرمبادلہ کے بھاری انخلا کا سبب بھی بنتے ہیں۔ڈاکٹر شمشاد اختر نے PMEXاور اس کے مستقبل کیاقدامات کے بارے میں تفصیلی خلاصے کے لیے اعجاز شاہ کا شکریہ ادا کیا۔انہوں نے DFMکے ذریعے سرمایہ کاروں کے فنڈز کو ہموار کرنے میں ایکسچینج کی کوششوں کو سراہا جس سے PMEXمیں ٹریڈنگ فیوچرز میں سرمایہ کاروں کا اعتماد بڑھانے میں مدد ملے گی۔انہوں نے بلیک مارکیٹ آپریٹرز کے خلاف کاروائیاں کرنے کی ضرورت کو تسلیم کیا اور اس لعنت کو ختم کرنے میں اپنے مکمل تعاون کا یقین دلایا۔مزید یہ کہ،انہوں نے GCTPکو سراہا ، جو پاکستان کی برآمدات کو بڑھانے میں ایک محرک کے طور پر کام کرے گا ۔انہوں نے PMEXکو اس کی مستقبل کی کوششوں میں بہترین حمایت کی یقین دہانی بھی کرائی۔

 

 

By Editor