مظفر آباد(ویب نیوز  )

بینک آف آزاد جموں و کشمیر نے دو سال سے بھی کم عرصہ میں تاریخی بزنس نتائج حاصل کرتے ہوئے398ملین روپے آپریٹنگ منافع کمایا۔ 31اکتوبر2021کے کاروباری نتائج کے مطابق منافع سمیت دیگر شعبہ جات ڈیپازٹس،ترسیلات زر، اثاثہ جات،قرضہ جات کی فراہمی میں بھی تاریخ ساز اضافہ ہوا ہے۔ بینک کے اثاثہ جات بڑھ کر 23.16ارب روپے، ڈیپازٹس 16.81ارب روپے، ترسیلات زر 3.62ارب روپے ہو گئے۔ بینک نے اس عرصہ میں انتہائی آسان شرائط پر صارفین کو 2.91ارب روپے کے قرضہ جات فراہم کئے۔ یہ بات قابل ذکر ہے کہ دو سال قبل ستمبر 2019میں بینک کا منافع 82ملین روپے اور اثاثہ جات 13.13بلین روپے تھے۔ عملے کی لگن، محنت اور ڈسپلن سے قلیل عرصہ میں ادارے کے منافع میں ساڑھے چار گنا اضافہ ہوا جو کہ بینک کی 15سالہ تاریخ میں ایک ریکارڈ ہے۔شاندار نتائج کے حصول میں بینک کے تمام شعبہ جات خاص طور پر کمرشل اینڈ رٹیل بینکنگ ڈویژنل ہیڈ، ریجنل کنٹرولز، زونل چیفس اور منیجرز سمیت فیلڈ ٹیم کا بھی نمایاں کردار ہے جنھوں نے بینک کے صدر کے ویژن پر عمل کرتے ہوئے کام کیا۔قوی امید ظاہر کی گئی ہے کہ ترقی کے اس تسلسل کو برقرار رکھا جائے گا۔دریں اثنا صدر اور سی ای او جناب خاور سعید نے آزاد کشمیر کے وزیر خزانہ، ان لینڈ ریونیو و امداد باہمی جناب عبد الماجد خان جو کہ بینک کے چیئر مین بھی ہیں، کاشکریہ ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کی رہنمائی میں ہماری ٹیم اہداف حاصل کرنے میں مصروف عمل رہے گی۔ بینک آف آزاد جموں و کشمیر کو کامیاب اور صف اول کے بینکوں میں شامل کرنے اورشیڈول بینک کا درجہ دلانے کے لئے تمام کوششیں بروئے کار لائے جا رہی ہیں۔ کسٹمر سروس میں بہتری، کمپلائنس اور آپریشنل کنٹرول پر خصوصی توجہ دی جا رہی ہے۔رواں سال اب تک 6 نئی برانچیں کھولنے کے بعد بینک کا نیٹ ورک76برانچوں تک پھیل گیا ہے۔ صارفین کو ان کی دہلیز پر ریاستی بینک کی خدمات فراہم کرنے کے لئے مزید برانچیں کھولی جائیں گی۔ریاست کی معاشی اور سماجی بہتری کے لئے سیاحت کی ترقی، صحت عامہ، ریاستی ملازمین کے لئے ایڈوانس سیلر ی سکیم، گھروں کی تعمیر،نئی گاڑیوں کی خریداری،گولڈ لون جیسی قرضہ جات کی بہترین اور معیاری سکیمیں لانچ کی گئی ہیں۔جن کے تحت انتہائی آسان شرائط اور کم ترین مارک اپ پر قرضہ جات کی فوری ادائیگی کی جاتی ہے۔ منافع اور ترسیلات زر میں اضافے کے لئے مستند کمپنیوں سے معاہدے کئے گئے ہیں۔بینک میں جدیدبینکاری تقاضوں سے مطابقت رکھنے والی انفارمیشن ٹیکنالوجی نصب کی جائے گی۔انہوں نے امید ظاہر کی کہ گزشتہ دو سال کی طرح بینک کے31دسمبر2021 کے بزنس نتائج بھی تاریخ ساز ثابت ہوں گے۔

By Editor