وزیرِ اعظم عمران خان نے اینگرو پولیمر کے نئے پلانٹ کا افتتاح کردیا

ایک لاکھ ٹن پی وی سی کی نئی پیداواری صلاحیت کے ساتھ ای پی سی ایل کی پی وی سی کی پیداوار 2لاکھ 95ہزار ٹن سالانہ ہوجائے گی

کراچی (ویب  نیوز) وزیرِ اعظم عمران خان نے اینگرو کارپوریشن کی ذیلی کمپنی اینگرو پولیمر اینڈ کیمیکلز کے نئے پلانٹ کا افتتاح کردیا۔ اس پلانٹ کے افتتاح کے بعد اینگرو پولیمر اینڈ کیمیکلز کی پی وی سی کی پیداوار ایک لاکھ ٹن اضافے کے ساتھ 2لاکھ 95ہزار ٹن سالانہ ہوجائے گی۔ پلانٹ کے افتتاح سے ملک کو درآمدی پی وی سی کا متبادل ملنے کے ساتھ ساتھ برآمدات کو بھی فروغ ملے گا۔ سٹوبشی اور آساہی گلا س کے ساتھ ایک مشترکہ منصوبے کے طورپر 1997میں قائم کی گئی ای پی سی ایل پاکستان میں مکمل طورپر مربوط کلورونائل کیمیکل کمپلیکس اور پی وی سی بنانے والی واحد کمپنی ہے۔کمپنی نے 2015سے اعلیٰ کارکردگی ، اعتماد اور آپریشنز میںپائیداری کیلئے پلانٹ کی توسیع اور دیگر اپ گریڈکے منصوبوں میں 188ملین ڈالر سے زائد کی سرمایہ کاری کی ہے۔انٹرنیشنل فنانس کارپوریشن کی 50ملین ڈالر کی فنانسنگ سپورٹ کے ساتھ پلانٹ کی توسیع مکمل کی گئی ہے اور پراجیکٹ کی تکمیل میں جاپانی لائسنس جاری کرنے والے ادارے اور چینی تعمیراتی ٹیم کے ساتھ گلوبل مہارت کا فائدہ اٹھایاگیاہے۔نئی پیداواری صلاحیت کے ساتھ اینگرو پولیمر اینڈ کیمیکلز کا پلانٹ اب 2لاکھ 95ہزارٹن سالانہ پی وی سی پیداکرے گا اور تعمیراتی شعبے کیلئے حکومت کی سازگار پالیسیوں کی وجہ سے بڑھتی ہوئی مقامی طلب کو پوراکرنے کے ساتھ ساتھ پی وی سی برآمد بھی کیا جاسکے گا۔مقامی پیداوار میں اضافے کے ذریعے ای پی سی ایل اب درآمدی متبادل کیلئے تقریباً 240ملین ڈالر کا حصہ ڈالے گی جبکہ کمپنی نے 2021میں ترکی اور مشرقِ وسطیٰ کی منڈیوں میں25ملین ڈالر مالیت کی پی وی سی ریسن برآمد کی ہے۔

ینگرو کارپوریشن کے صدر اور چیف ایگزیکٹو آفیسراور ای پی سی ایل کے چیئرمین غیاث خان کے مطابق ایک ملکی گروپ کے طورپر اینگرو نے ہمیشہ پاکستان کی اقتصادی صلاحیت پر یقین رکھا ہے اور اسی لیے ہم نے ایسے کاروباری شعبوں میں سرمایہ کاری کا عہد کیا ہے جو پاکستان کے چند انتہائی اہم مسائل کو حل کرنے میں مد د فراہم کرتے ہیں۔ پلانٹ میں توسیع اینگرو کیلئے تاریخی کامیابی ہے اور ہمیں یقین ہے کہ یہ پاکستان کے پیٹرو کیمیکلز کے منظرنامے کو نئی شکل دے گا۔ ہم برآمد ات پر مبنی انڈسٹریلائزیشن کو فروغ دینے کیلئے حکومت کی ‘میک ان پاکستان’ پالیسی کی بھرپور حمایت کرتے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ میں اپنی مقامی ٹیموں، عالمی شراکت داروں اور حکومت کے اسٹیک ہولڈرز کا شکریہ ادا کرتا ہوں جنہوں نے کووِیڈ19کی وجہ سے درپیش چیلنجز کے باوجود اس توسیع کی تکمیل کیلئے مثالی تعاون کا مظاہرہ کیا۔ افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیرِ اعظم عمران خان نے کہاکہ پی ٹی آئی کی حکومت مقامی کاروبار بڑھانے،درآمدات کا متبادل اور برآمدات کو فروغ دینے کی پالیسیوں پر عمل پیرا ہے۔ وزیرِ اعظم عمران خان نے تاجر برادری پر خاص طورپر زوردیا کہ درآمدات کے متبادل اور برآمدات کو فروغ دینے پر توجہ دیں تاکہ پاکستان کی پائیدار اقتصادی ترقی میں مدد مل سکے۔ انہوں نے معیشت کے مختلف شعبوں میں اینگرو کارپوریشن اور اس کی ذیلی کمپنیوں کے اہم کردار کو سراہا۔ پاکستان میں پی وی سی کی طلب میں ہرسال 6فیصد کی مستقل شرح سے اضافہ ہورہا ہے جو تقریباً70فیصد تعمیراتی شعبے میںاستعمال کی جاتی ہے۔پی وی سی کے علاوہ، اینگرو پولیمر اینڈ کیمیکلز ٹیکسٹائل انڈسٹری کیلئے کاسٹک سوڈاکا کلیدی خام مال بھی تیار کرتی ہے۔ اس طرح کمپنی پاکستان کے سب سے بڑے برآمدی شعبے کیلئے سپلائی چین کی اہم ترین پارٹنر ہے۔

By Editor